بم کی موجودگی کی اطلاع۔۔۔22شہروں کو 45ہزار لوگوں سے خالی کرا دیا گیا۔۔کارروائی جاری

ماسکو (مانیٹرنگ ڈیسک ) اہم ایشیائی ملک روس کے دارالحکومت ماسکو میںٹیلی فون پر ملنے والی بم حملوں کی اطلاعات نے سکیورٹی حکام کی ناک میں دم کر رکھا ہے۔

جبکہ گزشتہ ایک ہفتے سے ملنے والی ایسی اطلاعات کی بنا پر 20کے قریب شہروں میں اہم پبلک مقامات پرموجود لوگوں کے ہجوم کو بھی پریشانی کا سامنا ہے۔ تازہ ترین اطلاعات کے مطابق ماسکو میں بم کی اطلاعات موصول ہونے پر متعدد عمارتیں خالی کرا لی گئیں۔ اور اس دوران تین ریلوے سٹیشنز بھی چھان مارے گئے۔

میڈیا کی رپورٹ کے مطابق ٹیلی فون پر موصول ہونے والی بم کی اطلاعات پر رواں ہفتے 17شہروں میں 190پبلک مقامات خالی کرائے گئے جبکہ 20ہزار لوگوں کو عمارات اور مصروف مقامات سے نکالا گیا۔ ان مقامات میں ماسکو کے تین بڑے ریلوے اسٹیشنز، بیس شاپنگ سینٹرز، اور تین یونیورسٹیاں شامل ہیں، بم ڈسپوزل اسکواڈ اور پولیس مشتبہ مقامات کی تلاشی لی گئی ہے۔گذشتہ روز بھی بائیس شہروں کے عوامی مقامات بم دھمکیوں پر پینتالیس ہزار لوگوں سے خالی کرا لیے گئے تھے، روس میں اس ہفتے کئی دھمکی آمیزکالز کی گئیں جو بعد میں غلط ثابت ہوئیں۔روسی سکیورٹی حکام کے مطابق ایسی اطلاعات ٹیلیفونک دہشتگردی کے زمرے میںآتی ہیں ۔ اور اب ان کالز کی تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں